پاکستانی عوام کی جیبوں پرحکومت کا رواں سال پیٹرولیم مصنوعات کی مد میں 206 ارب روپے کا ڈاکہ

پاکستانی عوام کی جیبوں پرحکومت کا رواں سال پیٹرولیم مصنوعات کی مد میں 206 ارب روپے کا ڈاکہ

پاکستانی عوام  کی جیبوں پرحکومت نے رواں سال پیٹرولیم مصنوعات کی مد میں 206 ارب روپے کا ڈاکہ ڈالا، قومی اسمبلی میں انکشاف

حکومت نے رواں سال عوام کی جیبوں پر پیٹرولیم مصنوعات کی 206 ارب روپے کا ڈاکہ ڈالا، قومی اسمبلی میں انکشاف

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 7 بار اضافہ جب کہ11 بار کمی کی گئی، ٹیکسوں کی مد میں 206 ارب 28 کروڑروپے عوام کی جیبوں سے نکلوا لیے

شخصیات ویب نیوز
رپورٹ: سید ماجد علی
حکومت نے رواں سال عوام کی جیبوں پر پیٹرولیم مصنوعات کی 206 ارب روپے کا ڈاکہ ڈالا ہے۔وزیربرائے پٹرولیم ڈویژن خسرو بختیار نے حکومت کے پہلے سال کے دوران پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اتار چڑھاو کی تفصیلات قومی اسمبلی میں پیش کرتے ہوئے بتایا کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 7 بار اضافہ جب کہ11 بار کمی کی گئی۔پٹرولیم ڈویڑن کے اعداد و شمار کے مطابق حکومت نے ایک سال میں پٹرولیم ٹیکسوں کی مد میں 206 ارب 28 کروڑروپے عوام کی جیبوں سے نکلوا لیے۔حکومت ڈیزل پرفی لیٹر 45 روپے 75 پیسے ٹیکس وصول کررہی ہے، پٹرول پر35 روپے، مٹی کے تیل پر20 روپے اورلائٹ ڈیزل پر14 روپے 98 پیسے فی لیٹر ٹیکس وصولی ہورہی ہے۔

Facebook Comments

POST A COMMENT.